پاکستانی کوہ پیما بھی سرد موسم میں پہلی بار k2 سرکرنےکے قریب 33

پاکستانی کوہ پیما بھی سرد موسم میں پہلی بار سرکرنےکے قریب

ملتان(اجالا نیوز-24جنوری-2021)
سخت سردی میں کے ٹو کی مہم جوئی کا دوسرا مراحلہ جاری ہے اور نیپالی مہم جوؤں کے بعد پاکستانی کوہ پیما بھی سرد موسم میں پہلی بار کے ٹو سر کرنے کے قریب ہیں۔
منصوبے کے مطابق پاکستانی کوہ پیماعلی سد پارہ ان کے بیٹے ساجد سدپارہ اور ایک غیر ملکی کوہ پیما 7 ہزار 400 میٹر بلندی پر کیمپ 3 پہنچ گئے ہیں اور امید ہے کہ کوہ پیما کل صبح تک چوٹی سر کرلیں گے۔
علی سد پارہ نے ٹوئٹر پر پوسٹ میں بتایا ہے کہ ‘الحمداللہ ، میں اپنے بیٹے کے ہمراہ کیمپت 3 پر پہنچ گیا ہوں، کچھ دیر آرام کے بعد ہم اپنا سفر رات 9 بجے شروع کریں گے اور انشاءاللہ صبح 9 بجے ہم اپنی منزل سر کرنے کے بعد پاکستانی پرچم کو لہرائیں گے ، ہمیں اپنی دُعاؤں میں یاد رکھیں’۔
علی سد پارہ کا کہنا ہےکہ 25 جنوری بروز پیر کا سورج پاکستان کے لیے ایک اور اعزاز کا دن ہوگا، جب میں اور میرا بیٹا ساجد علی بغیر کسی آکسیجن کے کوہ پیما کو سرد موسم میں سر کرکے عالمی دُنیا میں پاکستان کا نام روشن کریں گے۔
خیال رہےکہ گذشتہ دنوں 10 نیپالی کوہ پیماؤں نے پہلی بار موسم سرما میں دنیا کی دوسری بلند ترین چوٹی کو سر کرنے کا اعزاز حاصل کیا تھا۔
کے ٹو کیمپ ون پر اسپین کا کوہ پیما حادثے کا بھی شکار ہوا تھا جو شدید زخمی ہونے کے بعد جانبر نہ ہوسکا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں